یہ جلالی دعا

آج ہر جائز مقصد کے لیے ایک خاص عمل بیان کریں گے۔آپ کا ہر کام بنے گا۔ ہر مقصد میں آسانی ہوگی ۔ رب تعالی ٰ بے گمان جگہ سے رزق عطافرمائےگا۔ فتحیابی ہوگی۔ کامیابی ہوگی ۔ اور رب کریم آپ کی دعاؤں کو قبول فرمائے گا۔ اسم اعظم وظیفہ ہے۔ چاررکعت نماز نفل اد ا کریں۔ اس کے بعد آپ نے خاص دعا پڑھنی ہے۔ وہ دعا ” سبحان اللہ ابدالا بد ، سبحان اللہ الواحدالاحد، سبحان اللہ الفرد الصمد ، سبحان اللہ الذی رفع السمو ت بغیر عمد، سبحان اللہ العظیم بحق لاالہ الا ھو الحی القیوم ” ہے۔ ان کلمات کاجو آخری حصہ ” لا الہ الا ھو الحی القیو م” یہ اسم اعظم دعا ہے۔اسم اعظم آیت ہے۔ یہ نوافل کے بعد پڑھیں گے ۔ انشاءاللہ! اللہ نے چاہا تو ہر مقصد کامیاب ہوگا۔ آپ کو دنیا میں کامیابی ہوگی سرخروئی ہوگی۔ مال وزر کےلیے پڑیں گے ۔

رب تعالیٰ عطا فرمائےگا۔سرفرازی ہوگی۔ دولت نصیب ہوگی۔ رب کریم کا میابیاں عطا فرمائیں گے ۔پریشانیوں کا خاتمہ ہوگا۔ ہر جائز مقصد کے لیے چار رکعت دوگانہ اس طریقہ سے پڑھیں کہ پہلی رکعت میں سورت الفاتحہ کے بعد سورت الفلق دس مرتبہ ، آیت الکرسی دس مرتبہ اور دوسر ی رکعت میں سورت الکافرون دس مرتبہ اور آیت الکرسی دس مرتبہ پڑھ کر سلام پھیر دیں۔ سلام پھیرنے کے بعد اکیس مرتبہ یہ دعا ” سبحان اللہ ابدالا بد ، سبحان اللہ الواحدالاحد، سبحان اللہ الفرد الصمد ، سبحان اللہ الذی رفع السمو ت بغیر عمد، سبحان اللہ العظیم بحق لاالہ الا ھو الحی القیوم ” پڑھیں۔ اس دعا میں اپنے مقصد ا ورپریشانیوں کوتصور رکھیں ۔ چار رکعت نماز نفل اد ا کرنے تھے ۔ دور کعت آپ نے کرلیے۔ سلا م پھیر لیا اور وہیں بیٹھ کر یہ اکیس مرتبہ دعا پڑھیں۔

اس کے بعدآپ نے اگلے دو نفل ادا کرنے ہیں۔ کیونکہ آپ نے چار رکعت نفل ادا کرنے ہیں ۔ یہ دو سلاموں کے ساتھ کریں گے۔یعنی آپ نے دو دو رکعتوں کی نیت باندھنی ہے ۔ اور بقیہ جو دو نفل ادا کریں گے۔ اس میں پہلی رکعت میں سورت الفاتحہ کے بعد سورت التکا ثر تین مرتبہ اور آیت الکرسی دس مرتبہ اور دوسری رکعت میں سورت الفاتحہ کے بعد سورت القدر اور سورت الزلزلت تین تین مرتبہ اور ایک الکرسی دس مرتبہ پڑھ کر نما ز سے فارغ ہوکر سجدہ میں جاکر سات مرتبہ درود ابراہیمی پڑھیں۔ اس کے بعد سجدے سے سر اٹھا کر دس مرتبہ ” لا الہ الا اللہ ھوالحی القیوم ” اور درود ابراہیمی ایک سو ایک مرتبہ پڑھ کر اللہ تعالیٰ سے دعا مانگے ۔ انشاءاللہ! اللہ تعالیٰ اس وظیفہ کی بدولت بہت جلد حاجت پور ی ہوگی۔ رب کریم اپنے غیبی خزانوں سے عطافرمائےگا۔ اللہ تعالیٰ کا قرب آپ کو حاصل ہوگا۔ اور فضل رحمت کے دروازے کھلیں گے ۔

Categories

Comments are closed.